ایک ساکت رات کا عذاب

انجم سلیمی

ایک ساکت رات کا عذاب

انجم سلیمی

MORE BYانجم سلیمی

    مرے بیڈروم میں زیرو کے بلب کی۔۔۔

    لہو رنگ روشنی سہمی ہوئی ہے

    لحاف اوڑھے بدن ٹوٹے پڑے ہیں

    سرہانے جاگتے ہیں نرم بوسے

    دہکتی ہیں خمار آلود آنکھیں

    مہکتی ہیں، اکھڑتی گرم سانسیں

    مگر سانسوں میں دل اٹکے ہوئے ہیں

    لہو رنگ روشنی سہمی ہوئی ہے

    میں کچی نیند سے جاگا ہوا ہوں

    وہ کچی عمر کی ٹوٹی ہوئی ہے

    مأخذ :
    • کتاب : Jalta Hai Badan (Pg. 28)
    • Author : Zahid Hasan
    • مطبع : Apnaidara, Lahore (2002)
    • اشاعت : 2002

    موضوعات :

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY