noImage

عیش دہلوی

1779 - 1874 | دلی, انڈیا

غالب کی غزلیہ شاعری کی نکتہ چینی کے لیے معروف

غالب کی غزلیہ شاعری کی نکتہ چینی کے لیے معروف

عیش دہلوی

غزل 16

اشعار 5

سینے میں اک کھٹک سی ہے اور بس

ہم نہیں جانتے کہ کیا ہے دل

  • شیئر کیجیے

کلام میر سمجھے اور زبان میرزا سمجھے

مگر ان کا کہا یہ آپ سمجھیں یا خدا سمجھے

  • شیئر کیجیے

اے شمع صبح ہوتی ہے روتی ہے کس لیے

تھوڑی سی رہ گئی ہے اسے بھی گزار دے

  • شیئر کیجیے

بے ثباتی چمن دہر کی ہے جن پہ کھلی

ہوس رنگ نہ وہ خواہش بو کرتے ہیں

  • شیئر کیجیے

میں برا ہی سہی بھلا نہ سہی

پر تری کون سی جفا نہ سہی

قطعہ 1

 

کتاب 1

 

آڈیو 7

پھول اللہ نے بنائے ہیں مہکنے کے لیے

جرأت اے دل مے و مینا ہے وہ خود_کام بھی ہے

جو ہوتا آہ تری آہ_بے_اثر میں اثر

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

"دلی" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

بولیے