noImage

ہاشم علی خاں دلازاک

ہاشم علی خاں دلازاک

غزل 1

 

اشعار 1

اسی امید پر تو جی رہے ہیں ہجر کے مارے

کبھی تو رخ سے اٹھے گی نقاب آہستہ آہستہ