noImage

امداد ہمدانی

غزل 2

 

اشعار 2

خزاں کا زہر سارے شہر کی رگ رگ میں اترا ہے

گلی کوچوں میں اب تو زرد چہرے دیکھنے ہوں گے

مصالحت کا پڑھا ہے جب سے نصاب میں نے

سلیقہ دنیا میں زندہ رہنے کا آ گیا ہے

 

کتاب 1

صداؤں کا سمندر