noImage

لالہ مادھو رام جوہر

1810 - 1890

کئی ضرب المثل شعروں کے خالق، مرزا غالب کے ہم عصر

کئی ضرب المثل شعروں کے خالق، مرزا غالب کے ہم عصر

غزل 39

اشعار 174

بھانپ ہی لیں گے اشارہ سر محفل جو کیا

تاڑنے والے قیامت کی نظر رکھتے ہیں

تجھ سا کوئی جہان میں نازک بدن کہاں

یہ پنکھڑی سے ہونٹ یہ گل سا بدن کہاں

  • شیئر کیجیے

غیروں سے تو فرصت تمہیں دن رات نہیں ہے

ہاں میرے لیے وقت ملاقات نہیں ہے

  • شیئر کیجیے

کتاب 1

انشائے مادھورام

 

 

 

تصویری شاعری 5

خواب میں نام ترا لے کے پکار اٹھتا ہوں بے_خودی میں بھی مجھے یاد تری یاد کی ہے

تھمے آنسو تو پھر تم شوق سے گھر کو چلے جانا کہاں جاتے ہو اس طوفان میں پانی ذرا ٹھہرے

دل کو سمجھاؤ ذرا عشق میں کیا رکھا ہے کس لیے آپ کو دیوانہ بنا رکھا ہے یہ تو معلوم ہے بیمار میں کیا رکھا ہے تیرے ملنے کی تمنا نے جلا رکھا ہے کون سا بادہ_کش ایسا ہے کہ جس کی خاطر جام پہلے ہی سے ساقی نے اٹھا رکھا ہے اپنے ہی حال میں رہنے دے مجھے اے ہم_دم تیری باتوں نے مرا دھیان بٹا رکھا ہے آتش_عشق سے اللہ بچائے سب کو اسی شعلے نے زمانے کو جلا رکھا ہے میں نے زلفوں کو چھوا ہو تو ڈسیں ناگ مجھے بے_خطا آپ نے الزام لگا رکھا ہے کیسے بھولے ہوئے ہیں گبر و مسلماں دونوں دیر میں بت ہے نہ کعبے میں خدا رکھا ہے

وہی شاگرد پھر ہو جاتے ہیں استاد اے جوہرؔ جو اپنے جان_و_دل سے خدمت_استاد کرتے ہیں

دوست دل رکھنے کو کرتے ہیں بہانے کیا کیا روز جھوٹی خبر_وصل سنا جاتے ہیں

 

آڈیو 6

آ گیا دل جو کہیں اور ہی صورت ہوگی

بت_کدہ میں نہ تجھے کعبے کے اندر پایا

بلبل تو بہت ہیں گل_رعنا نہیں کوئی

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

متعلقہ شعرا

  • مرزا سلامت علی دبیر مرزا سلامت علی دبیر ہم عصر
  • تعشق لکھنوی تعشق لکھنوی ہم عصر
  • سخی لکھنوی سخی لکھنوی ہم عصر
  • میر انیس میر انیس ہم عصر
  • مصطفیٰ خاں شیفتہ مصطفیٰ خاں شیفتہ ہم عصر
  • بہادر شاہ ظفر بہادر شاہ ظفر ہم عصر
  • مومن خاں مومن مومن خاں مومن ہم عصر
  • شاد لکھنوی شاد لکھنوی ہم عصر
  • میر تسکینؔ دہلوی میر تسکینؔ دہلوی ہم عصر
  • مرزا غالب مرزا غالب ہم عصر