aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Nasir Kazmi's Photo'

ناصر کاظمی

1925 - 1972 | لاہور, پاکستان

جدید اردو غزل کے بنیاد سازوں میں شامل ، ہندوستان کے شہر انبالہ میں پیدا ہوئے اور پاکستان ہجرت کر گئے جہاں انہوں نے تقسیم اور ہجرت کی تکلیف اور اثرات کو موضوع سخن بنایا

جدید اردو غزل کے بنیاد سازوں میں شامل ، ہندوستان کے شہر انبالہ میں پیدا ہوئے اور پاکستان ہجرت کر گئے جہاں انہوں نے تقسیم اور ہجرت کی تکلیف اور اثرات کو موضوع سخن بنایا

ناصر کاظمی کے ویڈیو

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر

ناصر کاظمی

تو اسیر_بزم ہے ہم_سخن تجھے ذوق_نالۂ_نے نہیں

ناصر کاظمی

دیار_دل کی رات میں چراغ سا جلا گیا

ناصر کاظمی

گلی گلی مری یاد بچھی ہے پیارے رستہ دیکھ کے چل

ناصر کاظمی

وہ ساحلوں پہ گانے والے کیا ہوئے

ناصر کاظمی

ویڈیو کا زمرہ
دیگر

فریدہ خانم

اقبال بانو

Gham hai ya khushi hai tu

Gham hai ya khushi hai tu نصرت فتح علی خان

Ishq jab zamzama pairaa hoga

Ishq jab zamzama pairaa hoga اقبال بانو

Nazm "Pahli Barish" by Nasir Kazmi

Nazm "Pahli Barish" by Nasir Kazmi ضیا محی الدین

Wo Is Ada Se Jo Aae to kyuun bhala

Wo Is Ada Se Jo Aae to kyuun bhala اقبال بانو

آج تجھے کیوں چپ سی لگی ہے

آج تجھے کیوں چپ سی لگی ہے شیفالی فراسٹ

پھر ساون رت کی پون چلی تم یاد آئے

پھر ساون رت کی پون چلی تم یاد آئے منی بیگم

پھر ساون رت کی پون چلی تم یاد آئے

پھر ساون رت کی پون چلی تم یاد آئے نیرہ نور

غم ہے یا خوشی ہے تو

غم ہے یا خوشی ہے تو نصرت فتح علی خان

کچھ تو احساس_زیاں تھا پہلے

کچھ تو احساس_زیاں تھا پہلے اقبال بانو

آج تجھے کیوں چپ سی لگی ہے

آج تجھے کیوں چپ سی لگی ہے امانت علی خان

آج تو بے_سبب اداس ہے جی

آج تو بے_سبب اداس ہے جی نامعلوم

اپنی دھن میں رہتا ہوں

اپنی دھن میں رہتا ہوں نامعلوم

پھر ساون رت کی پون چلی تم یاد آئے

پھر ساون رت کی پون چلی تم یاد آئے نیرہ نور

ترے آنے کا دھوکا سا رہا ہے

ترے آنے کا دھوکا سا رہا ہے عابدہ پروین

ترے خیال سے لو دے اٹھی ہے تنہائی

ترے خیال سے لو دے اٹھی ہے تنہائی اعجاز حسین حضروی

تو جب میرے گھر آیا تھا

تو جب میرے گھر آیا تھا نامعلوم

جلوہ_ساماں ہے رنگ_و_بو ہم سے

جلوہ_ساماں ہے رنگ_و_بو ہم سے فریدہ خانم

جلوہ_ساماں ہے رنگ_و_بو ہم سے

جلوہ_ساماں ہے رنگ_و_بو ہم سے فریدہ خانم

دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا

دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا نور جہاں

دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا

دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا فردوسی بیگم

دل میں اور تو کیا رکھا ہے

دل میں اور تو کیا رکھا ہے غلام علی

دل میں اک لہر سی اٹھی ہے ابھی

دل میں اک لہر سی اٹھی ہے ابھی تصور خانم

دیار_دل کی رات میں چراغ سا جلا گیا

دیار_دل کی رات میں چراغ سا جلا گیا زہرا نگاہ

دیار_دل کی رات میں چراغ سا جلا گیا

دیار_دل کی رات میں چراغ سا جلا گیا متفرق

دیار_دل کی رات میں چراغ سا جلا گیا

دیار_دل کی رات میں چراغ سا جلا گیا نور جہاں

شہر سنسان ہے کدھر جائیں

شہر سنسان ہے کدھر جائیں عابدہ پروین

عشق جب زمزمہ_پیرا ہوگا

عشق جب زمزمہ_پیرا ہوگا اقبال بانو

گئے دنوں کا سراغ لے کر کدھر سے آیا کدھر گیا وہ

گئے دنوں کا سراغ لے کر کدھر سے آیا کدھر گیا وہ زہرا نگاہ

گئے دنوں کا سراغ لے کر کدھر سے آیا کدھر گیا وہ

گئے دنوں کا سراغ لے کر کدھر سے آیا کدھر گیا وہ حبیب ولی محمد

گرفتہ_دل ہیں بہت آج تیرے دیوانے

گرفتہ_دل ہیں بہت آج تیرے دیوانے فریدہ خانم

گرفتہ_دل ہیں بہت آج تیرے دیوانے

گرفتہ_دل ہیں بہت آج تیرے دیوانے اقبال بانو

میں نے جب لکھنا سیکھا تھا

میں نے جب لکھنا سیکھا تھا فریدہ خانم

نئے کپڑے بدل کر جاؤں کہاں اور بال بناؤں کس کے لیے

نئے کپڑے بدل کر جاؤں کہاں اور بال بناؤں کس کے لیے خلیل حیدر

نیت_شوق بھر نہ جائے کہیں

نیت_شوق بھر نہ جائے کہیں نور جہاں

نیت_شوق بھر نہ جائے کہیں

نیت_شوق بھر نہ جائے کہیں نامعلوم

وہ اس ادا سے جو آئے تو کیوں بھلا نہ لگے

وہ اس ادا سے جو آئے تو کیوں بھلا نہ لگے اقبال بانو

وہ دل_نواز ہے لیکن نظر_شناس نہیں

وہ دل_نواز ہے لیکن نظر_شناس نہیں مہدی حسن

وہ دل_نواز ہے لیکن نظر_شناس نہیں

وہ دل_نواز ہے لیکن نظر_شناس نہیں مہدی حسن

وہ ساحلوں پہ گانے والے کیا ہوئے

وہ ساحلوں پہ گانے والے کیا ہوئے ضیا محی الدین

کچھ تو احساس_زیاں تھا پہلے

کچھ تو احساس_زیاں تھا پہلے اقبال بانو

کسی کلی نے بھی دیکھا نہ آنکھ بھر کے مجھے

کسی کلی نے بھی دیکھا نہ آنکھ بھر کے مجھے عابدہ پروین

کسی کلی نے بھی دیکھا نہ آنکھ بھر کے مجھے

کسی کلی نے بھی دیکھا نہ آنکھ بھر کے مجھے زہرا نگاہ

کون اس راہ سے گزرتا ہے

کون اس راہ سے گزرتا ہے فریدہ خانم

کون اس راہ سے گزرتا ہے

کون اس راہ سے گزرتا ہے پیناز مسانی

یاد آتا ہے روز و شب کوئی

یاد آتا ہے روز و شب کوئی اعجاز حسین حضروی

یاد آتا ہے روز و شب کوئی

یاد آتا ہے روز و شب کوئی سیان چودھری

یہ بھی کیا شام_ملاقات آئی

یہ بھی کیا شام_ملاقات آئی پیناز مسانی

یہ شب یہ خیال_و_خواب تیرے

یہ شب یہ خیال_و_خواب تیرے زہرا نگاہ

دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا

دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا آشا بھوسلے

دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا

دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا پنکج اداس

کلام شاعر بہ زبان شاعر

دیگر

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے