Prem Kumar Nazar's Photo'

پریم کمار نظر

1936 | ہوشیار پور, ہندوستان

غزل 24

نظم 3

 

اشعار 11

رکھ دی ہے اس نے کھول کے خود جسم کی کتاب

سادہ ورق پہ لے کوئی منظر اتار دے

  • شیئر کیجیے

جی چاہتا ہے ہاتھ لگا کر بھی دیکھ لیں

اس کا بدن قبا ہے کہ اس کی قبا بدن

بہت لمبی مسافت ہے بدن کی

مسافر مبتدی تھکنے لگا ہے

ای- کتاب 2

اذکار

 

1987

لوح بدن

 

1979

 

شعرا کے مزید "ہوشیار پور"

  • ابو الحسنات حقی ابو الحسنات حقی
  • اسلم محمود اسلم محمود
  • خورشید طلب خورشید طلب
  • اختر پیامی اختر پیامی
  • ارشد عبد الحمید ارشد عبد الحمید
  • والی آسی والی آسی
  • احمد شناس احمد شناس
  • انجم لدھیانوی انجم لدھیانوی
  • فرحان سالم فرحان سالم
  • نظیر باقری نظیر باقری