noImage

سخی لکھنوی

1813 - 1876

سخی لکھنوی

غزل 34

اشعار 53

جائے گی گلشن تلک اس گل کی آمد کی خبر

آئے گی بلبل مرے گھر میں مبارک باد کو

ہچکیاں آتی ہیں پر لیتے نہیں وہ میرا نام

دیکھنا ان کی فراموشی کو میری یاد کو

بات کرنے میں ہونٹ لڑتے ہیں

ایسے تکرار کا خدا حافظ

برگ گل آ میں تیرے بوسے لوں

تجھ میں ہے ڈھنگ یار کے لب کا

دفن ہم ہو چکے تو کہتے ہیں

اس گنہ گار کا خدا حافظ

کتاب 1

 

متعلقہ شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

بولیے