aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
noImage

وقار واثقی

1917

وقار واثقی کے دوہے

بھابی کل پھر آؤں گی اب تو جی گھبرائے

ان کی عادت ہے عجب تنہا نیند نہ آئے

دفن کرے گا تو کہاں جلنا بھی معلوم

مانوتا کی لاش ہے سر پر لے کر گھوم

کل تک میری چال میں پڑ نہ سکا تھا جھول

منڈوے تلے میں بیٹھ کر آج بکی بے مول

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے