اپنی گرہ سے کچھ نہ مجھے آپ دیجئے

اکبر الہ آبادی

اپنی گرہ سے کچھ نہ مجھے آپ دیجئے

اکبر الہ آبادی

MORE BYاکبر الہ آبادی

    اپنی گرہ سے کچھ نہ مجھے آپ دیجئے

    اخبار میں تو نام مرا چھاپ دیجئے

    دیکھو جسے وہ پانیر آفس میں ہے ڈٹا

    بہر خدا مجھے بھی کہیں چھاپ دیجئے

    چشم جہاں سے حالت اصلی چھپی نہیں

    اخبار میں جو چاہئے وہ چھاپ دیجئے

    دعویٰ بہت بڑا ہے ریاضی میں آپ کو

    طول شب فراق کو تو ناپ دیجئے

    سنتے نہیں ہیں شیخ نئی روشنی کی بات

    انجن کی ان کے کان میں اب بھاپ دیجئے

    اس بت کے در پہ غیر سے اکبرؔ نے کہہ دیا

    زر ہی میں دینے لایا ہوں جان آپ دیجئے

    مأخذ :
    • کتاب : Kulliyat-e-akbar (Pg. 262)
    • Author : Sayed Akbar husain Akbar Allahabadi
    • مطبع : Farid Book Depot Pvt. Ltd

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے