aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

مرے شانوں پہ ان کی زلف لہرائی تو کیا ہوگا

عنوان چشتی

مرے شانوں پہ ان کی زلف لہرائی تو کیا ہوگا

عنوان چشتی

MORE BYعنوان چشتی

    مرے شانوں پہ ان کی زلف لہرائی تو کیا ہوگا

    محبت کو خنک سائے میں نیند آئی تو کیا ہوگا

    پریشاں ہو کے دل ترک تعلق پر ہے آمادہ

    محبت میں یہ صورت بھی نہ راس آئی تو کیا ہوگا

    سر محفل وہ مجھ سے بے سبب آنکھیں چراتے ہیں

    کوئی ایسے میں تہمت ان کے سر آئی تو کیا ہوگا

    مجھے پیہم محبت کی نظر سے دیکھنے والے

    مرے دل پر تری تصویر اتر آئی تو کیا ہوگا

    بہت مسرور ہیں وہ چھین کر دل کا سکوں عنواںؔ

    ہجوم غم میں بھی مجھ کو ہنسی آئی تو کیا ہوگا

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق,

    نعمان شوق

    مرے شانوں پہ ان کی زلف لہرائی تو کیا ہوگا نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے