زہد کس کس نے لٹائے ہیں تمہیں کیا معلوم

سیف الدین سیف

زہد کس کس نے لٹائے ہیں تمہیں کیا معلوم

سیف الدین سیف

MORE BYسیف الدین سیف

    زہد کس کس نے لٹائے ہیں تمہیں کیا معلوم

    آج وہ کیا نظر آئے ہیں تمہیں کیا معلوم

    تم کو بیگانے بھی اپناتے ہیں میں جانتا ہوں

    میرے اپنے بھی پرائے ہیں تمہیں کیا معلوم

    کتنی ویران ہیں بے نور ہیں آنکھیں میری

    یہ دیئے کس نے بجھائے ہیں تمہیں کیا معلوم

    شوق آوارہ کو صحرائے فراموشی میں

    راستے ڈھونڈنے آئے ہیں تمہیں کیا معلوم

    اہل دل حسرت دل لے کے تمہارے در پر

    آج کس بھیس میں آئے ہیں تمہیں کیا معلوم

    دیکھ کر حال ہمارا نہ ہنسو غربت میں

    کون ہیں کس طرح آئے ہیں تمہیں کیا معلوم

    سیفؔ یہ درد سے معمور خرابے دل کے

    کتنی مشکل سے بسائے ہیں تمہیں کیا معلوم

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY