دن کو کہہ دیں رات ہم سمجھے نہیں

عامر موسوی

دن کو کہہ دیں رات ہم سمجھے نہیں

عامر موسوی

MORE BYعامر موسوی

    دن کو کہہ دیں رات ہم سمجھے نہیں

    آپ کی یہ بات ہم سمجھے نہیں

    ہم کہ اک رہن قفس بسمل نفس

    آسماں ہیں سات ہم سمجھے نہیں

    کیا سمجھ میں آئے ذات ماسوا

    ما سوائے ذات ہم سمجھے نہیں

    عشق سے باز آتے ہم دیوانے کیا

    تھی سمجھ کی بات ہم سمجھے نہیں

    الغرض ہے زیست مرہون اجل

    غایت غایات ہم سمجھے نہیں

    بات سب کی بات سے ہے مختلف

    تیری عامرؔ بات ہم سمجھے نہیں

    مأخذ :
    • کتاب : Shora-e-London (Pg. 147)
    • Author : Johar Zahiri
    • مطبع : Books From India (U.K) Ltd. 45, Museum Street,Londan W.C-1 (1985)
    • اشاعت : 1985

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY