سب کو بچاؤ خود بھی بچو فاصلہ رکھو

جواد شیخ

سب کو بچاؤ خود بھی بچو فاصلہ رکھو

جواد شیخ

MORE BYجواد شیخ

    سب کو بچاؤ خود بھی بچو فاصلہ رکھو

    اب اور کچھ کرو نہ کرو فاصلہ رکھو

    خطرہ تو مفت میں بھی نہیں لینا چاہیے

    گھر سے نکل کے مول نہ لو فاصلہ رکھو

    فی الحال اس سے بچنے کا ہے ایک راستہ

    وہ یہ کہ اس سے بچ کے رہو فاصلہ رکھو

    دشمن ہے اور طرح کا جنگ اور طرح کی

    آگے بڑھو نہ پیچھے ہٹو فاصلہ رکھو

    حل بھی تلاش کر لیا جائے گا عن قریب

    تم اس وبا کو بڑھنے نہ دو فاصلہ رکھو

    رکھنے کی بس یہ تین ہی چیزیں ہیں ان دنوں

    ہمت رکھو یقین رکھو فاصلہ رکھو

    کرتے ہو جس طرح برے لوگوں سے اجتناب

    اچھوں سے بھی گریز کرو فاصلہ رکھو

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY
    بولیے