جس سے یہ طبیعت بڑی مشکل سے لگی تھی

احمد فراز

جس سے یہ طبیعت بڑی مشکل سے لگی تھی

احمد فراز

MORE BYاحمد فراز

    جس سے یہ طبیعت بڑی مشکل سے لگی تھی

    دیکھا تو وہ تصویر ہر اک دل سے لگی تھی

    تنہائی میں روتے ہیں کہ یوں دل کو سکوں ہو

    یہ چوٹ کسی صاحب محفل سے لگی تھی

    اے دل ترے آشوب نے پھر حشر جگایا

    بے درد ابھی آنکھ بھی مشکل سے لگی تھی

    خلقت کا عجب حال تھا اس کوئے ستم میں

    سائے کی طرح دامن قاتل سے لگی تھی

    اترا بھی تو کب درد کا چڑھتا ہوا دریا

    جب کشتیٔ جاں موت کے ساحل سے لگی تھی

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    جس سے یہ طبیعت بڑی مشکل سے لگی تھی نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY