تجھے ہے مشق ستم کا ملال ویسے ہی

احمد فراز

تجھے ہے مشق ستم کا ملال ویسے ہی

احمد فراز

MORE BYاحمد فراز

    تجھے ہے مشق ستم کا ملال ویسے ہی

    ہماری جان تھی جاں پر وبال ویسے ہی

    چلا تھا ذکر زمانے کی بے وفائی کا

    سو آ گیا ہے تمہارا خیال ویسے ہی

    ہم آ گئے ہیں تہ دام تو نصیب اپنا

    وگرنہ اس نے تو پھینکا تھا جال ویسے ہی

    میں روکنا ہی نہیں چاہتا تھا وار اس کا

    گری نہیں مرے ہاتھوں سے ڈھال ویسے ہی

    زمانہ ہم سے بھلا دشمنی تو کیا رکھتا

    سو کر گیا ہے ہمیں پائمال ویسے ہی

    مجھے بھی شوق نہ تھا داستاں سنانے کا

    فرازؔ اس نے بھی پوچھا تھا حال ویسے ہی

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    احمد فراز

    احمد فراز

    RECITATIONS

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    نعمان شوق

    تجھے ہے مشق ستم کا ملال ویسے ہی نعمان شوق

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY