Asad Badayuni's Photo'

اسعد بدایونی

1952 - 2003 | علی گڑہ, ہندوستان

ممتاز ما بعد جدید شاعر، رسالہ’دائرے‘ کے مدیر

ممتاز ما بعد جدید شاعر، رسالہ’دائرے‘ کے مدیر

اسعد بدایونی

غزل 77

اشعار 31

سب اک چراغ کے پروانے ہونا چاہتے ہیں

عجیب لوگ ہیں دیوانے ہونا چاہتے ہیں

دیکھنے کے لیے سارا عالم بھی کم

چاہنے کے لیے ایک چہرا بہت

میری رسوائی کے اسباب ہیں میرے اندر

آدمی ہوں سو بہت خواب ہیں میرے اندر

  • شیئر کیجیے

گاؤں کی آنکھ سے بستی کی نظر سے دیکھا

ایک ہی رنگ ہے دنیا کو جدھر سے دیکھا

بچھڑ کے تجھ سے کسی دوسرے پہ مرنا ہے

یہ تجربہ بھی اسی زندگی میں کرنا ہے

کتاب 13

اسعد بدایونی بحثیت شاعر

 

2013

بارش

 

1981

بارش

 

1981

بیخود بدایونی

حیات اور ادبی خدمات

1995

داغ کے اہم تلامذہ

 

1986

دھوپ کی سرحد

 

1977

انتخاب کلام بیخود بدایونی

 

1990

جدیدیت کا مغنی اسعد بدایونی

 

2015

جنوں کنارا

 

1992

خیمۂ خواب

 

1984

آڈیو 21

ابھی زمین کو سودا بہت سروں کا ہے

بچھڑ کے تجھ سے کسی دوسرے پہ مرنا ہے

جو عکس_یار تہہ_آب دیکھ سکتے ہیں

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

مزید دیکھیے

"علی گڑہ" کے مزید شعرا

  • شہریار شہریار
  • اختر انصاری اختر انصاری
  • سیدہ فرحت سیدہ فرحت
  • مہتاب حیدر نقوی مہتاب حیدر نقوی
  • راحت حسن راحت حسن
  • معین احسن جذبی معین احسن جذبی
  • خلیل الرحمن اعظمی خلیل الرحمن اعظمی
  • منظور ہاشمی منظور ہاشمی
  • وحید اختر وحید اختر
  • احسن مارہروی احسن مارہروی