Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

اسلم عمادی

غزل 8

نظم 7

اشعار 7

ہزار راستے بدلے ہزار سوانگ رچے

مگر ہے رقص میں سر پر اک آسمان وہی

تم مرے کمرے کے اندر جھانکنے آئے ہو کیوں

سو رہا ہوں چین سے ہوں ٹھیک ہے سب ٹھیک ہے

ہم بھی اسلمؔ اسی گمان میں ہیں

ہم نے بھی کوئی زندگی جی تھی

انہیں یہ فکر کہ دل کو کہاں چھپا رکھیں

ہمیں یہ شوق کہ دل کا خسارہ کیونکر ہو

تمہارے درد سے جاگے تو ان کی قدر کھلی

وگرنہ پہلے بھی اپنے تھے جسم و جان وہی

کتاب 10

 

آڈیو 7

اب رات آرہی ہے

انتظار

خوف

Recitation

"حیدر آباد" کے مزید شعرا

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے