Editor Choiceمنتخب Popular Choiceمقبول
غزلصنف
0 ا ,اپنی ساری کاوشوں کو رائیگاں میں نے کیا0
0 ا ,بہت لمبا سفر تپتی سلگتی خواہشوں کا تھا0
0 ا ,خود ہمیں کو راحتوں کے کیف کا چسکا نہ تھا0
0 ا ,ڈوب کر خود میں کبھی یوں بے_کراں ہو جاؤں_گا0
0 ا ,روشنی پھیلی تو سب کا رنگ کالا ہو گیا2
0 ا ,سرحد_جسم سے باہر کہیں گھر لکھا تھا0
0 ا ,سرحد_جسم سے باہر کہیں گھر لکھا تھا0
0 ا ,گو مرا ساتھ مری اپنی نظر نے نہ دیا0
0 ا ,ہماری آنکھ میں ٹھہرا ہوا سمندر تھا0
0 ا ,وہ جو کسی کا روپ دھار کر آیا تھا0
0 ا ,وہ روح کے گنبد میں صدا بن کے ملے_گا1
0 آج تک پھرتا رہا میں تجھ میں ہی کھویا ہوا0
0 ج ,دن میں اس طرح مرے دل میں سمایا سورج0
0 ر ,جو غم میں جلتے رہے عمر_بھر دیا بن کر0
0 ر ,عمر بھر چلتے رہے ہم وقت کی تلوار پر0
0 ساحل پہ رک کے سوئے سمندر نہ دیکھیے0
0 ن ,ایک ہنگامہ بپا ہے مجھ میں0
0 ن ,پھر اس کے بعد کا نہ ہو گزر مجھ میں0
0 ن ,تیرے قدموں کی آہٹ کو ترسا ہوں2
0 ن ,خلائے_ذہن کے گنبد میں گونجتا ہوں میں0
0 ن ,میں اپنے آپ سے اک کھیل کرنے والا ہوں0
0 ن ,میں بچھڑ کر تجھ سے تیری روح کے پیکر میں ہوں0
0 ن ,ہر اک شکست کو اے کاش اس طرح میں سہوں0
0 و ,کبھی ملی جو ترے درد کی نوا مجھ کو0
0 ے ,آنے والے حادثوں کے خوف سے سہمے ہوئے2
0 ے ,تمہارے پاس رہیں ہم تو موت بھی کیا ہے1
0 ے ,کرب ہرے موسم کا تب تک سہنا پڑتا ہے0
0 ے ,کسی نے صدا دی کون آیا ہے0
0 ی ,لمحہ لمحہ اک نئی سعئ_بقا کرتی ہوئی0
0 ے ,میرا تو نام ریت کے ساگر پہ نقش ہے0
seek-warrow-w
  • 1
arrow-eseek-e1 - 30 of 30 items