Azhar Faragh's Photo'

پاکستان کی نئی نسل کے مشہور شاعر، ’میں کسی داستان سے ابھروں گا‘ کے نام سے شعری مجموعہ شائع ہوا

پاکستان کی نئی نسل کے مشہور شاعر، ’میں کسی داستان سے ابھروں گا‘ کے نام سے شعری مجموعہ شائع ہوا

اظہر فراغ

غزل 20

اشعار 44

دیواریں چھوٹی ہوتی تھیں لیکن پردہ ہوتا تھا

تالوں کی ایجاد سے پہلے صرف بھروسہ ہوتا تھا

  • شیئر کیجیے

دفتر سے مل نہیں رہی چھٹی وگرنہ میں

بارش کی ایک بوند نہ بیکار جانے دوں

  • شیئر کیجیے

تیری شرطوں پہ ہی کرنا ہے اگر تجھ کو قبول

یہ سہولت تو مجھے سارا جہاں دیتا ہے

  • شیئر کیجیے

خطوں کو کھولتی دیمک کا شکریہ ورنہ

تڑپ رہی تھی لفافوں میں بے زبانی پڑی

  • شیئر کیجیے

جب تک ماتھا چوم کے رخصت کرنے والی زندہ تھی

دروازے کے باہر تک بھی منہ میں لقمہ ہوتا تھا

  • شیئر کیجیے

قطعہ 1

 

کتاب 1

ازالہ

 

2016

 

تصویری شاعری 1

تیری شرطوں پہ ہی کرنا ہے اگر تجھ کو قبول یہ سہولت تو مجھے سارا جہاں دیتا ہے

 

ویڈیو 3

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر

اظہر فراغ

دیواریں چھوٹی ہوتی تھیں لیکن پردہ ہوتا تھا

اظہر فراغ

دیواریں چھوٹی ہوتی تھیں لیکن پردہ ہوتا تھا

اظہر فراغ

مزید دیکھیے

متعلقہ شعرا

  • کاشف حسین غائر کاشف حسین غائر ہم عصر
  • تہذیب حافی تہذیب حافی ہم عصر
  • رحمان فارس رحمان فارس ہم عصر

"بہاول پور" کے مزید شعرا

  • افضل خان افضل خان
  • ظہور نظر ظہور نظر
  • سید ضیاءالدین نعیم سید ضیاءالدین نعیم
  • احتشام حسن احتشام حسن
  • مریم ناز مریم ناز
  • خرم آفاق خرم آفاق
  • اعجاز توکل اعجاز توکل
  • ذیشان اطہر ذیشان اطہر
  • پارس مزاری پارس مزاری