Bismil Saeedi's Photo'

بسمل سعیدی

1901 - 1976 | ٹونک, انڈیا

کلاسیکی طرز معروف شاعر/ سیماب اکبرآبادی کے شاگرد

کلاسیکی طرز معروف شاعر/ سیماب اکبرآبادی کے شاگرد

بسمل سعیدی

غزل 45

اشعار 19

ہم نے کانٹوں کو بھی نرمی سے چھوا ہے اکثر

لوگ بے درد ہیں پھولوں کو مسل دیتے ہیں

  • شیئر کیجیے

سر جس پہ نہ جھک جائے اسے در نہیں کہتے

ہر در پہ جو جھک جائے اسے سر نہیں کہتے

ٹھوکر کسی پتھر سے اگر کھائی ہے میں نے

منزل کا نشاں بھی اسی پتھر سے ملا ہے

  • شیئر کیجیے

کیا تباہ تو دلی نے بھی بہت بسملؔ

مگر خدا کی قسم لکھنؤ نے لوٹ لیا

  • شیئر کیجیے

ادھر ادھر مری آنکھیں تجھے پکارتی ہیں

مری نگاہ نہیں ہے زبان ہے گویا

  • شیئر کیجیے

کتاب 11

تصویری شاعری 2

 

آڈیو 8

اب عشق رہا نہ وہ جنوں ہے

بیٹھا نہیں ہوں سایۂ_دیوار دیکھ کر

رہرو_راہ_محبت کون سی منزل میں ہے

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

متعلقہ شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

بولیے