Ejaz Rahmani's Photo'

اعجاز رحمانی

1936 - 2019 | کراچی, پاکستان

غزل 11

اشعار 6

ابھی سے پاؤں کے چھالے نہ دیکھو

ابھی یارو سفر کی ابتدا ہے

  • شیئر کیجیے

تالاب تو برسات میں ہو جاتے ہیں کم ظرف

باہر کبھی آپے سے سمندر نہیں ہوتا

  • شیئر کیجیے

وہ ایک پل کی رفاقت بھی کیا رفاقت تھی

جو دے گئی ہے مجھے عمر بھر کی تنہائی

  • شیئر کیجیے

فطرت کے تقاضے کبھی بدلے نہیں جاتے

خوشبو ہے اگر وہ تو بکھرنا ہی پڑے گا

گزر رہا ہوں میں سودا گروں کی بستی سے

بدن پہ دیکھیے کب تک لباس رہتا ہے

تصویری شاعری 1

ابھی سے پاؤں کے چھالے نہ دیکھو ابھی یارو سفر کی ابتدا ہے

 

مزید دیکھیے

متعلقہ شعرا

  • قمر جلالوی قمر جلالوی استاد
  • مظفر وارثی مظفر وارثی ہم عصر
  • کشور ناہید کشور ناہید ہم عصر

"کراچی" کے مزید شعرا

  • جون ایلیا جون ایلیا
  • ذیشان ساحل ذیشان ساحل
  • آرزو لکھنوی آرزو لکھنوی
  • سلیم احمد سلیم احمد
  • انور شعور انور شعور
  • محسن احسان محسن احسان
  • دلاور فگار دلاور فگار
  • عذرا عباس عذرا عباس
  • پیرزادہ قاسم پیرزادہ قاسم
  • عبید اللہ علیم عبید اللہ علیم