Ganesh Bihari Tarz's Photo'

گنیش بہاری طرز

1932 - 2008 | لکھنؤ, ہندوستان

گنیش بہاری طرز

غزل 8

اشعار 12

اہل دل کے واسطے پیغام ہو کر رہ گئی

زندگی مجبوریوں کا نام ہو کر رہ گئی

اے گردشو تمہیں ذرا تاخیر ہو گئی

اب میرا انتظار کرو میں نشے میں ہوں

اب میں حدود ہوش و خرد سے گزر گیا

ٹھکراؤ چاہے پیار کرو میں نشے میں ہوں

داغؔ کے شعر جوانی میں بھلے لگتے ہیں

میرؔ کی کوئی غزل گاؤ کہ کچھ چین پڑے

  • شیئر کیجیے

ارض دکن میں جان تو دلی میں دل بنی

اور شہر لکھنؤ میں حنا بن گئی غزل

  • شیئر کیجیے

قطعہ 17

کتاب 2

حنا بن گئی غزل

 

2003

فن اور شخصیت

گنیش بہاری طرز: شمارہ نمبر۔019-026

1989

 

تصویری شاعری 2

کیا ضد ہے کہ برسات بھی ہو اور نہیں بھی ہو تم کون ہو جو ساتھ بھی ہو اور نہیں بھی ہو پھر بھی انہیں لمحات میں جانے سے فائدہ؟ پل بھر کو ملاقات بھی ہو اور نہیں بھی ہو

 

"لکھنؤ" کے مزید شعرا

  • مصحفی غلام ہمدانی مصحفی غلام ہمدانی
  • جرأت قلندر بخش جرأت قلندر بخش
  • حیدر علی آتش حیدر علی آتش
  • امداد علی بحر امداد علی بحر
  • عرفان صدیقی عرفان صدیقی
  • عزیز بانو داراب وفا عزیز بانو داراب وفا
  • ارشد علی خان قلق ارشد علی خان قلق
  • ولی اللہ محب ولی اللہ محب
  • اسرار الحق مجاز اسرار الحق مجاز
  • وزیر علی صبا لکھنؤی وزیر علی صبا لکھنؤی