Irfan Siddiqi's Photo'

عرفان صدیقی

1939 - 2004 | لکھنؤ, انڈیا

اہم ترین جدید شاعروں میں شامل، اپنے نوکلاسیکی لہجے کے لیے معروف

اہم ترین جدید شاعروں میں شامل، اپنے نوکلاسیکی لہجے کے لیے معروف

عرفان صدیقی

غزل 76

اشعار 95

اٹھو یہ منظر شب تاب دیکھنے کے لیے

کہ نیند شرط نہیں خواب دیکھنے کے لیے

بدن میں جیسے لہو تازیانہ ہو گیا ہے

اسے گلے سے لگائے زمانہ ہو گیا ہے

ہوشیاری دل نادان بہت کرتا ہے

رنج کم سہتا ہے اعلان بہت کرتا ہے

  • شیئر کیجیے

رات کو جیت تو پاتا نہیں لیکن یہ چراغ

کم سے کم رات کا نقصان بہت کرتا ہے

  • شیئر کیجیے

تم پرندوں سے زیادہ تو نہیں ہو آزاد

شام ہونے کو ہے اب گھر کی طرف لوٹ چلو

  • شیئر کیجیے

کتاب 16

تصویری شاعری 6

 

ویڈیو 9

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر

عرفان صدیقی

عرفان صدیقی

عرفان صدیقی

عرفان صدیقی

عرفان صدیقی

اٹھو یہ منظر_شب_تاب دیکھنے کے لیے

عرفان صدیقی

جب یہ عالم ہو تو لکھیے لب_و_رخسار پہ خاک

عرفان صدیقی

حلقۂ_بے_طلباں رنج_گراں_باری کیا

عرفان صدیقی

دھنک سے پھول سے برگ_حنا سے کچھ نہیں ہوتا

عرفان صدیقی

آڈیو 24

انہیں کی شہ سے انہیں مات کرتا رہتا ہوں

اٹھو یہ منظر_شب_تاب دیکھنے کے لیے

بدن میں جیسے لہو تازیانہ ہو گیا ہے

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

متعلقہ بلاگ

 

متعلقہ شعرا

"لکھنؤ" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے