aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Kishwar Naheed's Photo'

پاکستانی شاعرہ ، اپنے تانیثی خیالات اور مذہبی کٹرپن کی مخالفت کے لئے مشہور

پاکستانی شاعرہ ، اپنے تانیثی خیالات اور مذہبی کٹرپن کی مخالفت کے لئے مشہور

کشور ناہید کے دوہے

آنکھ کی پتلی سب کچھ دیکھے دیکھے نہ اپنی ذات

اجلا دھاگا میلا ہووے لگیں جو میلے ہات

سوت کے کچے دھاگے جیسے رشتے پر اتراؤں

ساجن ہاتھ بھی چھو لیں تو میں پھول گلاب بن جاؤں

میں بہری تھی کاگا بولا سن نہ سکی سندیش

دل کہتا ہے کل آئیں گے پیا بدل کے بھیس

تکیہ بھیگا سانس بھی ڈوبی مرجھائی ہر آس

دل کو راہ پہ لانے کی ہر آس بنی سنیاس

پریم کیا اور ساتھ نہ چھوٹا کیسے تھے وہ لوگ

ہم نے پیاروں کا اب تک دیکھا نہ سنجوگ

تپتے لمحے دہکتے چہرے سب کچھ دھیان میں لاؤں

پتی پتی چاہے توڑوں دل کا بوجھ ہٹاؤں

ٹھنڈی رات اور ٹھنڈا بستر سکھی ری کانٹے آئے

لوگ کہیں جو دکھ سانجھے ہوں دل ہلکا ہو جائے

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے