Nasir Shahzad's Photo'

ناصر شہزاد

1937 - 2007 | اوکاڑہ, پاکستان

ناصر شہزاد

غزل 44

اشعار 32

اخروٹ کھائیں تاپیں انگیٹھی پہ آگ آ

رستے تمام گاؤں کے کہرے سے اٹ گئے

  • شیئر کیجیے

پھر یوں ہوا کہ مجھ سے وہ یوں ہی بچھڑ گیا

پھر یوں ہوا کہ زیست کے دن یوں ہی کٹ گئے

  • شیئر کیجیے

نیا باندھو ندی کنارے سکھی

چاند بیراگ رات تیاگ لگے

تجھ سے ملی نگاہ تو دیکھا کہ درمیاں

چاندی کے آبشار تھے سونے کی راہ تھی

  • شیئر کیجیے

یاد آئے تو مجھ کو بہت جب شب کٹے جب پو پھٹے

جب وادیوں میں دور تک کہرا دکھے بے انت سا

  • شیئر کیجیے

کتاب 2

بن باس

 

2004

چاندنی کی پتیاں

 

1965

 

متعلقہ شعرا

  • عادل منصوری عادل منصوری ہم عصر

"اوکاڑہ" کے مزید شعرا

  • احمد کامران احمد کامران
  • ماجد رضا امیر ماجد رضا امیر
  • شبانہ زیدی شبین شبانہ زیدی شبین
  • طلحہ گوہر چشتی طلحہ گوہر چشتی