noImage

افتخار مغل

1961 | پاکستان

افتخار مغل

غزل 10

اشعار 14

کسی سبب سے اگر بولتا نہیں ہوں میں

تو یوں نہیں کہ تجھے سوچتا نہیں ہوں میں

ہم نے اس چہرے کو باندھا نہیں مہتاب مثال

ہم نے مہتاب کو اس رخ کے مماثل باندھا

خدا! صلہ دے دعا کا، محبتوں کے خدا

خدا! کسی نے کسی کے لیے دعا کی تھی

محبت اور عبادت میں فرق تو ہے ناں

سو چھین لی ہے تری دوستی محبت نے

مرے وجود کے اندر مجھے تلاش نہ کر

کہ اس مکان میں اکثر رہا نہیں ہوں میں

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

بولیے