Nazeer Akbarabadi's Photo'

نظیر اکبرآبادی

1735 - 1830 | آگرہ, ہندوستان

میر تقی میر کے ہم عصر ممتاز شاعر، جنہوں نے ہندوستانی ثقافت اور تہواروں پر نظمیں لکھیں ، ہولی ، دیوالی اور دیگر موضوعات پر نظموں کے لئے مشہور

میر تقی میر کے ہم عصر ممتاز شاعر، جنہوں نے ہندوستانی ثقافت اور تہواروں پر نظمیں لکھیں ، ہولی ، دیوالی اور دیگر موضوعات پر نظموں کے لئے مشہور

غزل 216

نظم 19

اشعار 102

پکارا قاصد اشک آج فوج غم کے ہاتھوں سے

ہوا تاراج پہلے شہر جاں دل کا نگر پیچھے

  • شیئر کیجیے

لکھیں ہم عیش کی تختی کو کس طرح اے جاں

قلم زمین کے اوپر دوات کوٹھے پر

نہ سرخی غنچۂ گل میں ترے دہن کی سی

نہ یاسمن میں صفائی ترے بدن کی سی

رباعی 22

ای- کتاب 44

اشعار نظیر

 

1940

بچوں کے نظیر

 

1959

دیوان نظیر

 

 

دیوان نظیر اکبرآبادی

 

1942

دیوان نظیر اکبرآبادی

 

 

فرہنگ نظیر

 

1991

انتخاب نظیراکبر آبادی

 

2001

انتخاب غزلیات نظیر اکبرآبادی

 

1994

انتخاب نظیر اکبرآبادی

 

1985

انتخاب نظیر اکبرآبادی

 

1970

ویڈیو 20

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
دیگر ویڈیو
"Bahr-e-Taweel"

Zia Mohiuddin reads "Bahr-e-Taweel" nazeer akbarabadi ka likha hua ek sher hai jo be-inteha lamba hai. Ziya sahib ki khubsurat aawaaz mein us ka lutf dugna ho jaata hai. ضیا محی الدین

Ahl-e-Duniya

Diwali Nazm

نامعلوم

Khoon rez karishma naaz sitam

چھایا گانگولی

Khoonrez Karishma Naaz Sitam

چھایا گانگولی

آدمی_نامہ

دنیا میں پادشہ ہے سو ہے وہ بھی آدمی حبیب تنویر

آدمی_نامہ

دنیا میں پادشہ ہے سو ہے وہ بھی آدمی عابد علی بیگ

آدمی_نامہ

دنیا میں پادشہ ہے سو ہے وہ بھی آدمی مہدی ظہیر

آدمی_نامہ

دنیا میں پادشہ ہے سو ہے وہ بھی آدمی محمد رفیع

آدمی_نامہ

دنیا میں پادشہ ہے سو ہے وہ بھی آدمی

بنجارہ_نامہ

ٹک حرص_و_ہوا کو چھوڑ میاں مت دیس بدیس پھرے مارا نامعلوم

بنجارہ_نامہ

ٹک حرص_و_ہوا کو چھوڑ میاں مت دیس بدیس پھرے مارا نامعلوم

بنجارہ_نامہ

ٹک حرص_و_ہوا کو چھوڑ میاں مت دیس بدیس پھرے مارا مکیش

بنجارہ_نامہ

ٹک حرص_و_ہوا کو چھوڑ میاں مت دیس بدیس پھرے مارا مہدی ظہیر

دور سے آئے تھے ساقی سن کے مے_خانے کو ہم

نرملا دیوی

دور سے آئے تھے ساقی سن کے مے_خانے کو ہم

محمد رفیع

روٹیاں

جب آدمی کے پیٹ میں آتی ہیں روٹیاں جسوندر سنگھ

ہولی

آ دھمکے عیش و طرب کیا کیا جب حسن دکھایا ہولی نے نامعلوم

ہولی کی بہاریں

جب پھاگن رنگ جھمکتے ہوں تب دیکھ بہاریں ہولی کی چھایا گانگولی

آڈیو 8

اس کے شرار_حسن نے شعلہ جو اک دکھا دیا

بھرے ہیں اس پری میں اب تو یارو سر_بسر موتی

رخ پری چشم پری زلف پری آن پری

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

شعرا کے مزید "آگرہ"

  • میکش اکبرآبادی میکش اکبرآبادی
  • رشمی بھاردواج رشمی بھاردواج
  • چاند اکبرآبادی چاند اکبرآبادی
 

Added to your favorites

Removed from your favorites