Saima Esma's Photo'

صائمہ اسما

لاہور, پاکستان

غزل 8

نظم 8

اشعار 7

آج سوچا ہے کہ خود رستے بنانا سیکھ لوں

اس طرح تو عمر ساری سوچتی رہ جاؤں گی

نقش جب زخم بنا زخم بھی ناسور ہوا

جا کے تب کوئی مسیحائی پہ مجبور ہوا

نہ جانے کیسی نگاہوں سے موت نے دیکھا

ہوئی ہے نیند سے بیدار زندگی کہ میں ہوں

قطعہ 4

 

شعرا کے مزید "لاہور"

  • وصی شاہ وصی شاہ
  • سلیم شاہد سلیم شاہد
  • شاہین عباس شاہین عباس
  • رشید قیصرانی رشید قیصرانی
  • زکریا شاذ زکریا شاذ
  • ناصر زیدی ناصر زیدی
  • نور بجنوری نور بجنوری
  • منظور عارف منظور عارف
  • جمیل یوسف جمیل یوسف
  • سرفراز زاہد سرفراز زاہد