Azhar Nawaz's Photo'

نوجوان شاعروں میں شامل

نوجوان شاعروں میں شامل

خوب صورت ہے صرف باہر سے

یہ عمارت بھی آدمی سی ہے

کسی بزدل کی صورت گھر سے یہ باہر نکلتا ہے

مرا غصہ کسی کمزور کے اوپر نکلتا ہے

جو میرا جھوٹ ہے اکثر مرے اندر نکلتا ہے

جسے کم تر سمجھتا ہوں وہی بہتر نکلتا ہے

کوئی کردار ادا کرتا ہے قیمت اس کی

جب کہانی کو نیا موڑ دیا جاتا ہے

محترم کہہ کے مجھے اس نے پشیمان کیا

کوئی پہلو نہ ملا جب مری رسوائی کا

چارہ سازو مرا علاج کرو

آج کچھ درد میں کمی سی ہے

مجھ کو ہر سمت لے کے جاتا ہے

ایک امکان تیرے ہونے کا