Parveen Shakir's Photo'

پروین شاکر

1952 - 1994 | کراچی, پاکستان

پاکستان کی مقبول ترین شاعرات میں شامل ، عورتوں کے مخصوص جذبوں کو آواز دینے کے لئے معروف

ای- کتاب 15

انکار

 

 

انکار

 

1990

انکار

 

1997

خود کلامی

 

 

خوشبو

 

1980

خوشبو

 

1988

ماہ تمام

 

1995

ماہ تمام

کلیات

1997

ماہ تمام

 

2008

ماہ تمام کلیات

 

1997

ویڈیو 46

This video is playing from YouTube

سیکشن سے ویڈیو
کلام شاعر بہ زبان شاعر
Ab itni saadgi laayen kahaan se

پروین شاکر

Baab-e-hairat se mujhe izn-e-safar hone ko hai

پروین شاکر

Sanaey Anjum o Tasbeehe

پروین شاکر

Taza mohabbaton ka maza

پروین شاکر

اب اتنی سادگی لائیں کہاں سے

پروین شاکر

اب بھلا چھوڑ کے گھر کیا کرتے

پروین شاکر

باب_حیرت سے مجھے اذن_سفر ہونے کو ہے

پروین شاکر

بخت سے کوئی شکایت ہے نہ افلاک سے ہے

پروین شاکر

تازہ محبتوں کا نشہ جسم_و_جاں میں ہے

پروین شاکر

چلنے کا حوصلہ نہیں رکنا محال کر دیا

پروین شاکر

حرف_تازہ نئی خوشبو میں لکھا چاہتا ہے

پروین شاکر

خیال_و_خواب ہوا برگ_و_بار کا موسم

پروین شاکر

کچھ تو ہوا بھی سرد تھی کچھ تھا ترا خیال بھی

پروین شاکر

کو_بہ_کو پھیل گئی بات شناسائی کی

پروین شاکر

ہم نے ہی لوٹنے کا ارادہ نہیں کیا

پروین شاکر

سیکشن سے ویڈیو
دیگر ویڈیو
Ek Khat- Parveen Shakir ke naam - by Zia Mohiuddin

ضیا محی الدین

Mushkil hai ke ab shahar mein nikle koi ghar se

رادھکا چوپڑا

غلام علی

بلقیس خانم

آج کی شب تو کسی طور گزر جائے_گی

آج کی شب تو کسی طور گزر جائے_گی نامعلوم

اپنی تنہائی مرے نام پہ آباد کرے

نامعلوم

اپنی رسوائی ترے نام کا چرچا دیکھوں

نامعلوم

اتنا معلوم ہے!

اپنے بستر پہ بہت دیر سے میں نیم_دراز نامعلوم

اسی میں خوش ہوں مرا دکھ کوئی تو سہتا ہے

نامعلوم

بادباں کھلنے سے پہلے کا اشارہ دیکھنا

طاہرہ سید

بارش ہوئی تو پھولوں کے تن چاک ہو گئے

بچھڑا ہے جو اک بار تو ملتے نہیں دیکھا

نامعلوم

پورا دکھ اور آدھا چاند

نامعلوم

تیری خوشبو کا پتا کرتی ہے

نامعلوم

سندر کومل سپنوں کی بارات گزر گئی جاناں

پنکج اداس

سندر کومل سپنوں کی بارات گزر گئی جاناں

طاہرہ سید

سندر کومل سپنوں کی بارات گزر گئی جاناں

ٹینا ثانی

شب وہی لیکن ستارہ اور ہے

رنا لیلیٰ

عکس_خوشبو ہوں بکھرنے سے نہ روکے کوئی

سادھنا سرگم

قریۂ_جاں میں کوئی پھول کھلانے آئے

ٹینا ثانی

گواہی کیسے ٹوٹتی معاملہ خدا کا تھا

ٹینا ثانی

مشکل ہے کہ اب شہر میں نکلے کوئی گھر سے

رادھکا چوپڑا

وہ تو خوش_بو ہے ہواؤں میں بکھر جائے_گا

غلام علی

ٹوٹی ہے میری نیند مگر تم کو اس سے کیا

تصور خانم

کچھ فیصلہ تو ہو کہ کدھر جانا چاہئے

ٹینا ثانی

کمال_ضبط کو خود بھی تو آزماؤں_گی

نامعلوم

کو_بہ_کو پھیل گئی بات شناسائی کی

مہدی حسن

کھلی آنکھوں میں سپنا جھانکتا ہے

نامعلوم

کھلے_گی اس نظر پہ چشم_تر آہستہ آہستہ

نامعلوم

کو_بہ_کو پھیل گئی بات شناسائی کی

راج کمار رضوی

آڈیو 4

بادباں کھلنے سے پہلے کا اشارہ دیکھنا

بخت سے کوئی شکایت ہے نہ افلاک سے ہے

پا_بہ_گل سب ہیں رہائی کی کرے تدبیر کون

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

مزید دیکھیے

کے مزید شاعر "کراچی"

  • سعادت حسن منٹو سعادت حسن منٹو
  • صادقین صادقین
  • عذرا عباس عذرا عباس
  • عنبرین حسیب عنبر عنبرین حسیب عنبر
  • لیث قریشی لیث قریشی
  • عبدالرحمان مومن عبدالرحمان مومن
  • انجلا ہمیش انجلا ہمیش
  • فیروزناطق خسرو فیروزناطق خسرو
  • اسامہ امیر اسامہ امیر
  • صبیحہ صبا صبیحہ صبا

Added to your favorites

Removed from your favorites