Faiz Ahmad Faiz's Photo'

فیض احمد فیض

1911 - 1984 | لاہور, پاکستان

سب سے پسندیدہ اور مقبول پاکستانی شاعروں میں سے ایک ، اپنے انقلابی خیالات کے سبب کئی برس قید میں رہے

سب سے پسندیدہ اور مقبول پاکستانی شاعروں میں سے ایک ، اپنے انقلابی خیالات کے سبب کئی برس قید میں رہے

فیض احمد فیض

غزل 88

اشعار 81

اور بھی دکھ ہیں زمانے میں محبت کے سوا

راحتیں اور بھی ہیں وصل کی راحت کے سوا

  • شیئر کیجیے

دل ناامید تو نہیں ناکام ہی تو ہے

لمبی ہے غم کی شام مگر شام ہی تو ہے

کر رہا تھا غم جہاں کا حساب

آج تم یاد بے حساب آئے

اور کیا دیکھنے کو باقی ہے

آپ سے دل لگا کے دیکھ لیا

دونوں جہان تیری محبت میں ہار کے

وہ جا رہا ہے کوئی شب غم گزار کے

قطعہ 36

قصہ 3

 

مضمون 1

 

کتاب 181

آج بازار میں پابہ جولاں چلو

فیض احمد فیض ایک مطالعہ

1988

بچوں کے فیض احمد فیض

 

2011

باد نو بہار

دیار ہندی میں فیض

2011

بیاد غالب و فیض

 

1987

دامن یوسف

فیض کے خطوط بیگم سرفراز اقبال کے نام

1989

دست تہ سنگ

 

 

دست صبا

 

1953

دست صبا

 

1982

دست تہ سنگ

 

 

دست تہ سنگ

 

1979

تصویری شاعری 54

میں کیا لکھوں کہ جو میرا تمہارا رشتہ ہے وہ عاشقی کی زباں میں کہیں بھی درج نہیں لکھا گیا ہے بہت لطف_وصل و درد_فراق مگر یہ کیفیت اپنی رقم نہیں ہے کہیں یہ اپنا عشق_ہم_آغوش جس میں ہجر و وصال یہ اپنا درد کہ ہے کب سے ہم_دم_مہ_و_سال اس عشق_خاص کو ہر ایک سے چھپائے ہوئے ''گزر گیا ہے زمانہ گلے لگائے ہوئے''

دشت_تنہائی میں اے جان_جہاں لرزاں ہیں تیری آواز کے سائے ترے ہونٹوں کے سراب دشت_تنہائی میں دوری کے خس و خاک تلے کھل رہے ہیں ترے پہلو کے سمن اور گلاب اٹھ رہی ہے کہیں قربت سے تری سانس کی آنچ اپنی خوشبو میں سلگتی ہوئی مدھم مدھم دور افق پار چمکتی ہوئی قطرہ قطرہ گر رہی ہے تری دل_دار نظر کی شبنم اس قدر پیار سے اے جان_جہاں رکھا ہے دل کے رخسار پہ اس وقت تری یاد نے ہات یوں گماں ہوتا ہے گرچہ ہے ابھی صبح_فراق ڈھل گیا ہجر کا دن آ بھی گئی وصل کی رات

ویڈیو 318

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر

فیض احمد فیض

فیض احمد فیض

Is waqt to lagta hai kahin kuch bhi nahi hai - In Faiz's own voiceIs waqt to lagta hai kahin kuch bhi nahi hai - In Faiz's own voice

Is waqt to lagta hai kahin kuch bhi nahi hai - In Faiz's own voice فیض احمد فیض

Taazaa hai abhi yaad mein ai gulfaam

فیض احمد فیض

jis roz qaza aaegi

کس طرح آئے_گی جس روز قضا آئے_گی فیض احمد فیض

mere milne wale

وہ در کھلا میرے غم_کدے کا فیض احمد فیض

mulaqat

یہ رات اس درد کا شجر ہے فیض احمد فیض

sar-e-wadi-e-sina

پھر برق فروزاں ہے سر_وادئ_سینا فیض احمد فیض

shishon ka masiha koi nahin

موتی ہو کہ شیشہ جام کہ در فیض احمد فیض

tanhai

پھر کوئی آیا دل_زار نہیں کوئی نہیں فیض احمد فیض

''آپ کی یاد آتی رہی رات بھر'' (ردیف .. ر)

فیض احمد فیض

آج اک حرف کو پھر ڈھونڈتا پھرتا ہے خیال

آج اک حرف کو پھر ڈھونڈتا پھرتا ہے خیال فیض احمد فیض

آج بازار میں پا_بہ_جولاں چلو

چشم_نم جان_شوریدہ کافی نہیں فیض احمد فیض

آج شب کوئی نہیں ہے

آج شب دل کے قریں کوئی نہیں ہے فیض احمد فیض

انتساب

آج کے نام فیض احمد فیض

ایک شہر_آشوب کا آغاز

اب بزم_سخن صحبت_لب_سوختگاں ہے فیض احمد فیض

بنیاد کچھ تو ہو

کوئے_ستم کی خامشی آباد کچھ تو ہو فیض احمد فیض

بہار آئی

بہار آئی تو جیسے یک_بار فیض احمد فیض

ترانہ

دربار_وطن میں جب اک دن سب جانے والے جائیں_گے فیض احمد فیض

ترے غم کو جاں کی تلاش تھی ترے جاں_نثار چلے گئے

فیض احمد فیض

تم آئے ہو نہ شب_انتظار گزری ہے

فیض احمد فیض

تم یہ کہتے ہو اب کوئی چارہ نہیں

تم یہ کہتے ہو وہ جنگ ہو بھی چکی! فیض احمد فیض

چند روز اور مری جان

چند روز اور مری جان فقط چند ہی روز فیض احمد فیض

خورشید_محشر کی لو

آج کے دن نہ پوچھو مرے دوستو فیض احمد فیض

خوشا ضمانت_غم

دیار_یار تری جوشش_جنوں پہ سلام فیض احمد فیض

درد آئے_گا دبے پاؤں

اور کچھ دیر میں جب پھر مرے تنہا دل کو فیض احمد فیض

دست_تۂ_سنگ_آمدہ

بیزار فضا درپئے_آزار صبا ہے فیض احمد فیض

دعا

آئیے ہاتھ اٹھائیں ہم بھی فیض احمد فیض

رفیق_راہ تھی منزل ہر اک تلاش کے بعد

فیض احمد فیض

زنداں کی ایک شام

شام کے پیچ_و_خم ستاروں سے فیض احمد فیض

زنداں کی ایک صبح

رات باقی تھی ابھی جب سر_بالیں آ کر فیض احمد فیض

سوچنے دو

اک ذرا سوچنے دو فیض احمد فیض

شفق کی راکھ میں جل بجھ گیا ستارۂ_شام (ردیف .. ے)

فیض احمد فیض

شور_بربط_و_نے

پہلی آواز فیض احمد فیض

صبح_آزادی (اگست_47)

یہ داغ داغ اجالا یہ شب_گزیدہ سحر فیض احمد فیض

طوق_و_دار کا موسم

روش_روش ہے وہی انتظار کا موسم فیض احمد فیض

فکر_سود_و_زیاں تو چھوٹے_گی

فیض احمد فیض

گرمئ_شوق_نظارہ کا اثر تو دیکھو

فیض احمد فیض

گلوں میں رنگ بھرے باد_نوبہار چلے

فیض احمد فیض

لوح_و_قلم

ہم پرورش_لوح_و_قلم کرتے رہیں_گے فیض احمد فیض

لہو کا سراغ

کہیں نہیں ہے کہیں بھی نہیں لہو کا سراغ فیض احمد فیض

مجھ سے پہلی سی محبت مری محبوب نہ مانگ

مجھ سے پہلی سی محبت مری محبوب نہ مانگ فیض احمد فیض

نثار میں تیری گلیوں کے

نثار میں تری گلیوں کے اے وطن کہ جہاں فیض احمد فیض

نہ کسی پہ زخم عیاں کوئی نہ کسی کو فکر رفو کی ہے

فیض احمد فیض

وہیں ہیں دل کے قرائن تمام کہتے ہیں

فیض احمد فیض

کہاں جاؤ_گے

اور کچھ دیر میں لٹ جائے_گا ہر بام پہ چاند فیض احمد فیض

ہجر کی راکھ اور وصال کے پھول

آج پھر درد_و_غم کے دھاگے میں فیض احمد فیض

ہر سمت پریشاں تری آمد کے قرینے

فیض احمد فیض

ہم پر تمہاری چاہ کا الزام ہی تو ہے

فیض احمد فیض

ہم سادہ ہی ایسے تھے کی یوں ہی پذیرائی

فیض احمد فیض

ہم سادہ ہی ایسے تھے کی یوں ہی پذیرائی

فیض احمد فیض

ہم نے سب شعر میں سنوارے تھے

فیض احمد فیض

ہمیں سے اپنی نوا ہم_کلام ہوتی رہی

فیض احمد فیض

نہیں نگاہ میں منزل تو جستجو ہی سہی

فیض احمد فیض

آڈیو 96

آئے کچھ ابر کچھ شراب آئے

اب جو کوئی پوچھے بھی تو اس سے کیا شرح_حالات کریں

ترے غم کو جاں کی تلاش تھی ترے جاں_نثار چلے گئے

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

متعلقہ بلاگ

 

مزید دیکھیے

متعلقہ شعرا

  • احمد فراز احمد فراز ہم عصر
  • پطرس بخاری پطرس بخاری استاد
  • علی سردار جعفری علی سردار جعفری ہم عصر
  • احسان دانش احسان دانش ہم عصر
  • عبید اللہ علیم عبید اللہ علیم ہم عصر
  • مجید امجد مجید امجد ہم عصر
  • اسرار الحق مجاز اسرار الحق مجاز ہم عصر
  • مخدومؔ محی الدین مخدومؔ محی الدین ہم عصر
  • محمد دین تاثیر محمد دین تاثیر برادر نسبتی

"لاہور" کے مزید شعرا

  • ظفر اقبال ظفر اقبال
  • شہزاد احمد شہزاد احمد
  • منیر نیازی منیر نیازی
  • ناصر کاظمی ناصر کاظمی
  • حبیب جالب حبیب جالب
  • امجد اسلام امجد امجد اسلام امجد
  • احسان دانش احسان دانش
  • نبیل احمد نبیل نبیل احمد نبیل
  • سیف الدین سیف سیف الدین سیف
  • احمد ندیم قاسمی احمد ندیم قاسمی